خربوزے کے فوائد آپ سن کر اللہ کا شکر ادا کئے بغیر نہیں رہ پائیں گے

خربوزے کا سیزن آ چکا ہے یقینا آپ لوگوں نے بھی خربوزے کھانا سٹارٹ کر دیا ہوگا لیکن بہت سے لوگ خربوزے کے فائدے نہیں جانتے۔
جب آپ خربوزے کے فائدے جاننے گے اس کے بعد آپ اللہ کا شکر ادا کئیے بغیر نہیں رہ سکیں گے۔

اگر میں خربوزے کی نیوٹریشن پروپٹی کی بات کی جائے تو 177 گرام خربوزوں میں تقریبا 64 کیلوریز ہوتی ہیں
خربوزے پوٹاشیم کا بہت اچھا سورس ہیں
اسکے علاوہ وٹامن اے وٹامن بی اور وٹامن سی بھی خربوزے میں اچھی خاصی مقدار میں پایا جاتا ہے
خربوزے نیا خون پیدا کرتے ہے
نہ صرف نیا خون پیدا کرتے ہیں بلکہ خون کی صفائی بھی کرتے ہیں.

اگر آپ کو ڈاکٹر نے یہ بتایا ہے کہ آپ کو خون کی کمی ہے تو گرمیاں آ چکی ہیں
یا اگر آپ کے علاقے میں کسی اور سیزن میں بھی خربوزے آتے ہیں خربوزے کھائیں انشاءاللہ خون کی کمی پوری ہو جائے گی
خربوزے جسم میں یوریک ایسڈ کی بڑھی ہوئی مقدار کو کم کرتی ہے اگر آپ کے جسم میں یوریک ایسڈ بڑھ گیا ہے
تو خربوزے کھانا شروع کرے انشاء اللہ مسلہ ختم ہو جائے گا.

اس کے علاوہ جن لوگوں کے جسم میں یورک ایسڈ بڑھ جاتا ہے ان کی جوانٹس میں تیل ہوتی ہے
اگر آپ کو بھی یوریک ایسڈ بڑھ جانے کی وجہ سے جوائنٹ میں درد رہتی ہے

تو خربوزے کھائیں انشاءاللہ دو تین دن کے
اندر اندر آپ کو رزلٹ نظر آنے لگ جائے گا۔خربوزے پیشاب آور ہے
کیونکہ خربوزے میں بہت زیادہ مقدار میں پانی ہوتا ہے
خربوزہ کھانے سے جسم کے زہریلے اور فاضل مادے پشاب کے راستے نکل جاتے ہیں

جن لوگوں کو گردوں میں پتھری ہے ان لوگوں کے لئے خربوزے بہت زیادہ فائدے مند اور مفید ہیں

خربوزہ کھانے سے گردے کی پتھری ریزہ ریزہ ہو کر پیشاب کے راستے نکل جاتی ہے.خربوزے میں ایک کمپاؤنڈ ہوتا ہے
جو خون کو جمنے نہیں دیتا اور خون کی روانی کو بہتر بناتا ہے

خون کے جم جانے یا ضرورت سے زیادہ گاڑے ہوجانے کی وجہ سے ہارٹ اٹیک کا خطرہ بڑھ جاتا ہے
اس طرح خربوزے صحت کے بہت اچھے ہیں اور ہارٹ اٹیک کے خطرے کو بھی کم کرتے ہیں۔

حکمت میں کہا جاتا ہے پیٹ کی صفائی کے لئے خربوزوں سے بہتر اور کچھ نہیں خربوزہ آپ کی پیٹ کی صفائی کرتی ہیں
آپ کے پیٹ میں اگر کھیڑے موجود ہیں تو خربوزہ کھانے سے پیٹ کے کیڑے مرجاتے ہیں

اور فضلے کے راستے سے جسم سے باہر نکل جاتے ہیں۔

خربوزہ میدے کی تیزابیت کیلئے بہت اچھے ہیں خربوزے کھانے سے معدے کی تیزابیت دور ہوتی ہے
جن لوگوں کو کھانا کھانے کے بعد پیٹ میں یا میدے میں جلن محسوس ہوتی ہیں
وہ بھی خربوزے کھائیں۔خربوزے دست آور ہیں
جن لوگوں کو قبض کا مسئلہ ہے یا ان کا پخانہ ٹھیک سے نہیں آتا

وہ بھی خربوزے کھائیں انشاءاللہ پرانی سے پرانی قبض دور ہو جائے گی خربوزے جسم کو مضبوط بناتے ہیں
خربوزے کھانے سے جسم کی کمزوری دور ہوتی ہے۔خربوزے آپ کی کمر کے لئے بہت اچھے ہیںاگر آپ کو کمر کی کمزوری ہے آپ کی کمر کمزور ہے کمر میں درد رہتا ہے تو خربوزے کھائیں انشاللہ کمر مضبوط ہوگی۔
خربوزے خواتین کے لئے بہت اچھی ہیں خواتین کے مخصوص امراض میں بہت فائدہ دیتے ہیں

اسکے علاوہ جو گرونگ ایج کے بچیاں ہوتی ہیں ان کو خربوزہ کھلائے جائیں،
بہت فائدہ دیں گے ان کو آگے چل کر۔

آپ لوگ جانتے ہیں پپیتا گوشت کو گلانے کے لیے استعمال ہوتا ہے لیکن آپ میں سے بہت ہی کم لوگ جانتے ہوں گے،
کہ خربوزے کے چھلکے بھی گوشت کو گھلا دیتے ہیں
پھکتے ہوئے گوشت میں خربوزے کے چھلکے ڈالنے سے گوشت بہت اچھی طرح گَل جاتا ہے۔

خربوزے آپ کے دانتوں کے لیے بہت اچھا ہے خربوزہ کھانے سے آپ کے دانت صاف ہوتے ہیں
خربوزے کان کے مریضوں کے لئے بہت اچھی ہیں

اگر یہ کان کے مریضوں کو خربوزے کھلایا جائے
انشاء اللہ افاقہ ہوگا۔خربوزے گرمی کی شدت کو کم کرتے ہیں
جن لوگوں کو بہت زیادہ پسینہ آتا ہے وہ خربوزے کا استعمال زیادہ کریں خربوزے دل کو سکون دیتے ہیں اگر آپ کے سینے میں جلن رہتی ہے،
بے چینی رہتی ہے خربوزے کا استعمال کریں۔

جو لوگ دبلے پن کا شکار ہیں یا اپنے جسم کو کٹیلا کرنا چاہتے ہیں وہ لوگ بھی خربوزے کا استعمال کریں جن لوگوں کا چہرہ پچکا ہوا ہے
خربوزے ان لوگوں کے لئے بہت اچھے ہیں ایک جدید ریسرچ یہ بھی بتاتی ہے،
کہ خربوزے کینسر سے بچاتے ہیں اس لئے خربوزے کے فائدے استعمال تواتر سے کرنا چاہئے یہ خدا کی نعمت ہے
اور سب سے بڑی بات اس پھل کو نہ صرف امیر بلکہ غریب بھی باآسانی کھا سکتے ہیں۔

وہ لوگ جن کو ہائی بلڈ پریشر رہتا ہے بلڈ پریشر کا مسئلہ ہے، خربوزے ان لوگوں کے لئے بہت اچھے ہیں
خربوزے کھانے سے سکن میں موجود زہریلے مادوں کا خاتمہ ہوگا
اور آپ کا سکن انشاءاللہ بالکل کلیئر اور صاف ہوجائے گی خربوزے کے بیج آپ کی دماغ کے لئے بہت اچھے ہوتے ہیں طب میں بننے والی ہر دوائی میں خربوزے کے بیج کا استعمال لازمی ہوتا ہے
تربوز آپ کا حافظہ تیز کرتے ہیں آپ کی یاداشت کو مضبوط بناتے ہیں،
دماغ کی سستی اور کاہلی کو ختم کرتی ہیں.

جن لوگوں کا دماغ کچاؤ کا شکار رہتا ہے وہ کخربوزےکے بیج کا استعمال لازمی کریں
10گرام خربوزے کے چھلے ہوئے بیچ 5 گرام مشری کے ساتھ ملا کر کھانے سے دماغ کی طاقت میں اضافہ ہوتا ہے،
دماغ کی کمزوری دور ہوجاتی ہے حافظہ بہترین ہو جاتا ہےخربوزے کھانے کا سب سے بہترین وقت کونسا ہے
طب میں مانا جاتا ہے کہ تربوز کھانے کا سب سے جو بیسٹ قائم ہے،
وہ دوپہر کا اور دوپہر کے کھانے کے دو گھنٹے بعد
اگر آپ خربوزے کھائیں اس سے بہتر طور کچھ نہیں ہوسکتا لیکن یاد رکھیے
کہ خربوزے کو کبھی خالی پیٹ استعمال نہیں کرنا چاہیے.

اس کے علاوہ خربوزہ کھانے کے بعد پوراٍ پانی بھی نہیں پینا چاہئے کم از کم آدھے گھنٹے بعد پانی پیا جائے وہ بہتر ہے،
اگر خربوزے کھانے کے بعد فوری پانی پی لیا جائے تو حیظہ ہونے کا خطرہ بہت زیادہ بڑھ جاتا ہے،
کیونکہ خربوزے کے اندر بہت زیادہ پانی ہوتا ہے.

کوئی بھی ایسا پھل جس میں زیادہ پانی پہلے سے ہی قدرت نہ رکھتا ہو
اس کے بعد کبھی بھی فورا پانی نہیں پینا چاہیے ویسے تو خربوزے کو دن کے کسی بھی حصہ میں استعمال کیا جاسکتا ہے،
لیکن رات کے کھانے کے بعد خربوزے سے پرہیز کرنا اچھا رہتا ہے.

Spread the love

اپنا تبصرہ بھیجیں