بل گیٹس پٹیشن دائر

بل گیٹس کے خلاف پٹیشن دائر بل گیٹس کے خلاف امریکی عوام نے وائٹ ہاؤس (White House) میں ایک پٹیشن دائر کی ہے جس میں موقف اپنایا گیا ہے کہ حکومت امریکہ اس بات کی تحقیقات کرےکہ کرونا وائرس وباء پھیلنے سے صرف
چند ہفتے پہلے 18 اکتوبر2019 کو کیسے بل اینڈ ملینڈا فائونڈیشن
(Bill and malinda foundation) نے John Hopkling Institute اور ورلڈ اکانومک فورم کے ساتھ مل کر Event 201 کا انعقاد کیا جس میں ممکنا وائرس پھیلنے والی وباء کی مکمل ریہرسل کروائی گئی کہ وباء پھیلنے کے بعد کس طرح تیاری کرنی ہے۔

پٹیشن میں یہ بھی مذکور کیا گیا ہے کہ بل گیٹس کا ماضی
انسانیت کے خلاف مظالم سے بھرا پڑا ہوا ہے کیونکہ یہ آدمی کئی عوامی مقامات پر اس بات کا اعتراف کرتا رہا ہے کہ ویکسینز سے
دنیا کی آبادی 10 سے 15 فیصد گھٹائی جاسکتی ہے۔
اب ہم اسکی کرونا ویکسین پر کیسے اعتبار کرسکتے ہیں؟

اسکے علاوہ پٹیشن میں یہ بھی اعتراف کیا گیا ہے کہ بل گیٹس
اقوام متحدہ کے اداروں WHO اور UNICEF کے ساتھ مل کر
پہلے ہی ویکسینز سے کینیا کے بچوں کو ایک خفیہ اینٹیجن
HCG منتقل کر کے بانجھ بناچکے ہیں۔۔۔۔۔

لہذہ لوگوں کا کہنا ہے کہ اب کیسے بل۔گیٹس پر کس طرح اعتماد کیا
جا سکتا ہے۔
امریکی عوام وائٹ ہاوس سے مطالبہ کرتی ہے کہ بل گیٹس کے
خلاف تحقیقات کی جائے اور جلد اس کے خلاف
کارروائی کی جائے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Petition Proof : https://petitions.whitehouse.gov/petition/we-call-investigations-bill-melinda-gates-foundation-medical-malpractice-crimes-against-humanity

Detail of Event 201: https://www.centerforhealthsecurity.org/event201/
#WhateverNews

Spread the love

اپنا تبصرہ بھیجیں